Menu

Content

Breadcrumb

A+ A A-

ايک خط کےجواب ميں

 

ہوس بھی ہو تو نہيں مجھ ميں ہمت تگ و تاز
حصول جاہ ہے وابستہ مذاق تلاش
ہزار شکر، طبيعت ہے ريزہ کار مری
ہزار شکر، نہيں ہے دماغ فتنہ تراش
مرے سخن سے دلوں کی ہيں کھيتياں سرسبز
جہاں ميں ہوں ميں مثال سحاب دريا پاش
يہ عقدہ ہائے سياست تجھے مبارک ہوں
کہ فيض عشق سے ناخن مرا ہے سينہ خراش
ہوائے بزم سلاطيں دليل مردہ دلی
کيا ہے حافظ رنگيں نوا نے راز يہ فاش

''گرت ہوا ست کہ با خضر ہم نشيں باشی
نہاں ز چشم سکندر چو آب حيواں باش

IIS Logo

www.DervishOnline.com

 

 

IQBAL DEMYSTIFIED - ANDROID APP