Menu

Content

Breadcrumb

A+ A A-

فطرت نے نہ بخشا مجھے انديشہ چالاک


فطرت نے نہ بخشا مجھے انديشہ چالاک
رکھتی ہے مگر طاقت پرواز مری خاک
وہ خاک کہ ہے جس کا جنوں صيقل ادراک
وہ خاک کہ جبريل کی ہے جس سے قبا چاک
وہ خاک کہ پروائے نشيمن نہيں رکھتی
چنتی نہيں پہنائے چمن سے خس و خاشاک
اس خاک کو اللہ نے بخشے ہيں وہ آنسو
کرتی ہے چمک جن کی ستاروں کو عرق ناک

IIS Logo

www.DervishOnline.com

 

 

IQBAL DEMYSTIFIED - ANDROID APP