Menu

Content

Breadcrumb

A+ A A-

پوچھ اس سے کہ مقبول ہے فطرت کی گواہی


پوچھ اس سے کہ مقبول ہے فطرت کی گواہی
تو صاحب منزل ہے کہ بھٹکا ہوا راہی
کافر ہے مسلماں تو نہ شاہی نہ فقيری
مومن ہے تو کرتا ہے فقيری ميں بھی شاہی
کافر ہے تو شمشير پہ کرتا ہے بھروسا
مومن ہے تو بے تيغ بھی لڑتا ہے سپاہی
کافر ہے تو ہے تابع تقدير مسلماں
مومن ہے تو وہ آپ ہے تقدير الہی
ميں نے توکيا پردۂ اسرار کو بھی چاک
ديرينہ ہے تيرا مرض کور نگاہی

---------------------

Translitration

Pooch Iss Se K Maqbool Hai Fitrat Ki Gawahi
Tu Sahib-E-Manzil Hai K Bahtka Huwa Raahi

Kafir Hai Musalman To Na Shahi Na Faqeeri
Momin Hai To Karta Hai Faqeeri Mein Bhi Shahi

Kafir Hai To Shamsheer Pe Karta Hai Bharosa
Momin Hai To Be-Taeg Bhi Larta Hai Sipahi

Kafir Hai To Hai Taba-E-Taqdeer Musalman
Momin Hai, To Who Aap Hai Taqdeer-E-ILAHI

Main Ne To Kiya Parda’ay Asrar Ko Bhi Chaak
Daireena Hai Tera Marz-E-Kaur Nigahi

-------------------------

IIS Logo

www.DervishOnline.com

 

 

IQBAL DEMYSTIFIED - ANDROID APP